روحِ سخن
a community for poetic dialogue

Directed by: Ammar Aziz. Press CC to view subtitles in English, Urdu, Hindi and Romanized Hindi-Urdu.

Elegy

I want to write an elegy

For windows, for winds, for voices

Windows that do not open

Winds that do not blow

Voices that are frozen in throats

I want to write an elegy

For prayers, for sighs

Prayers that have lost all effect

Sighs that are lost in space

I want to write an elegy

For Gods

Who have forgotten the art of even protecting themselves

Who are forever receding further from the earth

Who are losing the capacity to hear any voice

I must write an elegy …

 

Translated by Nauman Naqvi

نوحہ

مجھے اک نوحہ لکھنا ہے

دریچوں کا، ہواؤں کا، صداؤں کا

دریچے جو نہیں کُھلتے

ہوائیں جو نہیں چلتیں

صدائیں حلق میں جو منجمند ہیں

مجھے اک نوحہ لکھنا ہے

دعاؤں کا، کراہوں کا

دعائیں بے اثر جو ہو چکی ہیں

کراہیں جو خلاء میں کھو چکی ہیں

مجھے اک نوحہ لکھنا ہے

خداؤں کا

جو آپ اپنی حفاطت کا ہنر تک بھول بیٹھے ہیں

مسلسل جو زمیں سے دور ہوتے جارہے ہیں

کوئی آواز سننے سے

بہت معزور ہوتے جارہے ہیں

مجھے اک نوحہ لکھنا ہے

دریچوں کا، ہواؤں کا، صداؤں کا، خداؤں کا

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *